1. This site uses cookies. By continuing to use this site, you are agreeing to our use of cookies. Learn More.
  2. السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ۔ اس فورم کا مقصد باہم گفت و شنید کا دروازہ کھول کر مزہبی مخالفت کو احسن طریق سے سلجھانے کی ایک مخلص کوشش ہے ۔ اللہ ہم سب کو ھدایت دے اور تا حیات خاتم النبیین صلی اللہ علیہ وسلم کا تابع بنائے رکھے ۔ آمین
    Dismiss Notice
  3. [IMG]
    Dismiss Notice
  4. السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ۔ مہربانی فرما کر اخلاق حسنہ کا مظاہرہ فرمائیں۔ اگر ایک فریق دوسرے کو گمراہ سمجھتا ہے تو اس کو احسن طریقے سے سمجھا کر راہ راست پر لانے کی کوشش کرے۔ جزاک اللہ
    Dismiss Notice

درثمین ۔ اوصاف قرآن مجید ۔ نور فرقاں ہے جو سب نوروں سے اَجلی ٰنکلا

'درثمین ۔ منظوم کلام حضرت مسیح موعود علیہ السلام' میں موضوعات آغاز کردہ از MindRoasterMir, ‏جون 1, 2018۔

  1. MindRoasterMir

    MindRoasterMir لا غالب الاللہ رکن انتظامیہ منتظم اعلیٰ معاون مستقل رکن


    5۔اوصاف ِقرآن مجید

    نور فرقاں ہے جو سب نوروں سے اَجلی ٰنکلا
    پاک وہ جس سے یہ انوار کا دریا نکلا

    حق کی توحید کا مرجھا ہی چلا تھا پودا
    ناگہاں غیب سے یہ چشمہ اصفی نکلا

    یا الٰہی تیرا فرقاں ہے کہ اک عالَم ہے
    جو ضروری تھا وہ سب اس میں مہیا نکلا

    سب جہاں چھان چکے ساری دکانیں دیکھیں
    مئے عرفان کا یہی ایک ہی شیشہ نکلا

    کس سے اس نور کی ممکن ہو جہاں میں تشبیہ
    وہ تو ہر بات میں ہر وصف میں یکتا نکلا

    پہلے سمجھے تھے کہ موسیٰ کا عصا ہے فرقاں
    پھر جو سوچا تو ہر اک لفظ مسیحا نکلا

    ہے قصور اپنا ہی اندھوں کا وگرنہ وہ نور
    ایسا چمکا ہے کہ صد نَیّرِ بیضا نکلا

    زندگی ایسوں کی کیا خاک ہے اس دنیا میں
    جن کا اس نور کے ہوتے بھی دل اَعمیٰ نکلا

    جلنےسے آگے ہی یہ لوگ تو جل جاتے ہیں
    جن کی ہر بات فقط جھوٹ کا پتلا نکلا

    براہین احمدیہ حصہ سوم صفحہ 274 مطبوعہ 1882ء
    درثمین صفحہ 9​
     

اس صفحے کو مشتہر کریں